اہم خبریں پاکستان سیاست

سپریم کورٹ نے مرتضیٰ وہاب کی برطرفی کا حکم واپس لے لیا۔

سپریم کورٹ نے مرتضیٰ وہاب کی برطرفی کا حکم واپس لے لیا۔
Written by admin

(ایشیا نیوز پوائنٹ)سپریم کورٹ نے پیر کو کراچی کے ایڈمنسٹریٹر مرتضیٰ وہاب کی غیر مشروط معافی قبول کرتے ہوئے انہیں عہدے سے ہٹانے کا حکم واپس لے لیا۔

مرتضیٰ وہاب نے سپریم کورٹ کے بینچ کے سامنے کہا کہ میں عدالت سے معافی مانگتا ہوں۔ بنچ کے رکن جسٹس قاضی محمد امین نے ریمارکس دیتے ہوۓ کہا کہ ’’ہم نے آپ کو ہٹا دیا ہے‘‘ اور مزید کہا کہ ایڈمنسٹریٹر کا عہدہ غیر جانبداری کا تقاضا کرتا ہے۔

سماعت کے دوران ایڈووکیٹ جنرل سندھ نے سپریم کورٹ بنچ سے مرتضیٰ وہاب کی غیر مشروط معافی قبول کرنے کی استدعا کی اور اس بات کو یقینی بنایا کہ وہ مستقبل میں سیاسی سرگرمیوں میں حصہ نہیں لیں گے۔

بعد ازاں چیف جسٹس جسٹس گلزار احمد نے وہاب کی معافی قبول کرتے ہوئے انہیں ایڈمنسٹریٹر رہتے ہوئے سیاست سے باز رہنے کا حکم دیا۔

چیف جسٹس گلزار نے مرتضی وہاب کو ہدایت کی کہ وہ کسی سیاسی وابستگی کے بغیر اپنے فرائض سرانجام دیں۔ 

قبل ازیں گٹر بگھیجہ اراضی کی الاٹمنٹ کیس کی سماعت کے دوران عدالت عظمیٰ نے عدالت کے وقار کو ٹھیس پہنچانے پر وہاب کو ایڈمنسٹریٹر کراچی کے عہدے سے ہٹانے کا حکم دیا تھا اور چیف جسٹس آف پاکستان (سی جے پی) نے انہیں فوری طور پر عدالت چھوڑنے کا حکم دیا تھا۔

عدالت عظمیٰ نے وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کو کراچی کے لیے نیا ایڈمنسٹریٹر مقرر کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ مرتضیٰ وہاب ایڈمنسٹریٹر کے بجائے سیاست دان کی طرح کام کررہے ہیں۔

About the author

admin

Leave a Comment