اہم خبریں پاکستان صحت

کے پی کے 7.5 ملین سے زائد خاندان صحت کارڈ کے تحت مفت علاج مہیا

کے پی کے 7.5 ملین سے زائد خاندان صحت کارڈ کے تحت مفت علاج مہیا
Written by admin

(ایشیا نیوز پوائنٹ)2021 کے دوران خیبر پختونخواہ (کے پی کے) میں 7.5 ملین سے زائد خاندانوں نے صحت کارڈ پلس کے ذریعے مفت صحت کی سہولیات حاصل کی ہیں۔ 

خیبر پختونخوا کے محکمہ صحت کی جانب سے جاری کردہ 2021 کے اعداد و شمار کے مطابق صوبے بھر کے 679 ہسپتالوں میں 75 لاکھ سے زائد خاندانوں نے مفت طبی علاج حاصل کیا۔

“750 ملین روپے کی لاگت سے سال کے دوران زچگی سے متعلق 60,000 سے زیادہ آپریشن کیے گئے،”  مزید کہا کہ 11,000 سے زیادہ مریضوں کی انجیو پلاسٹی کی گئی جس پر 2171 ملین روپے کے اخراجات آئے۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ 294 ملین روپے کی لاگت سے 22 ہزار مریضوں کا مفت اپینڈکس آپریشن کیا گیا جبکہ 271 ملین روپے کی لاگت سے 14 ہزار مریضوں کا مفت کیموتھراپی کیا گیا۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ90,000 سے زائد مریضوں نے مفت ڈائیلاسز کا علاج کروایا، جس کے نتیجے میں صحت کارڈ پلس کے ذریعے 276 ملین روپے کی ادائیگیاں ہوئیں،

وزیر اعظم عمران خان نے حال ہی میں پنجاب کے لیے نیا پاکستان صحت کارڈ کا آغاز بھی کیا ہے اور کہا ہے کہ صوبے کی پوری آبادی مارچ 2022 تک اس سے فائدہ اٹھا سکے گی۔

لاہور میں افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے، وزیر اعظم نے وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار اور وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد کو یہ کارنامہ سرانجام دینے اور صوبے کی پوری آبادی کے لیے یونیورسل ہیلتھ کوریج کی فراہمی کو یقینی بنانے پر سراہا۔

خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے مزید کہا کہ جب انہوں نے پوری آبادی کو صحت کارڈ فراہم کرنے کے خیال پر بات کی تو وزیر اعلی پنجاب اور وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد حیران رہ گئے۔

تاہم، انہوں نے کہا کہ ان کی لگن کے ساتھ یہ منصوبہ 01 جنوری سے صوبے میں شروع ہونے کے لیے تیار ہے اور صوبے کے تمام خاندانوں کو مارچ 2022 تک کارڈ مل جائیں گے۔

About the author

admin

Leave a Comment